29/05/2023

ہم سے رابطہ کریں

اسلام آباد :وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا ہے کہ 11 اکتوبر سے تمام تعلیمی ادارے مکمل طور پر کھولے جا رہے ہیں، 30 اکتوبر کے بعد جزوی ویکسی نیشن اور 30 نومبر کے بعد مکمل ویکسی نیشن نہ کرانیوالے افراد پر پابندیاں ہونگی۔ان کا کہنا تھا کہ کورونا وبا کا خطرہ ابھی ٹلا نہیں، 6 کروڑ سے زائد افراد کو جزوی یا مکمل ویکسین لگ چکی، کورونا ویکسین میں عمر کی حد 12 سال تک لے گئے ہیں، ملک میں کورونا ویکسی نیشن اچھے طریقے سے جاری ہے، وزارت تعلیم نے ٹیلی اسکول سمیت دیگر اقدامات کئے ہیں۔

مظفر آباد: آزاد کشمیر کے8 اکتوبر 2005 کے زلزلے کو 16 برس بیت گئے، اس موقع پر شہدائے زلزلہ کی یاد میں آزاد کشمیر کے مختلف شہروں میں دعائیہ تقریبات کا انعقاد کیا گیا جبکہ کئی شہروں میں قرآن خوانی بھی کی گئی۔مظفرآباد میں شہدائے زلزلہ کی یاد میں مرکزی تقریب کا انعقاد کیا گیا۔ تقریب میں وزیراعظم آزاد کشمیر، وزرائ سمیت شہریوں کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔ وزیراعظم آزاد کشمیر نے شہدائے زلزلہ کی یادگار پر پھول چڑھائے جبکہ 8 بج کر 52 منٹ پر سائرن بجائے گئے۔

کوئٹہ:بلوچستان میں سیاسی بحران تاحال برقرار ہے اورگورنر بلوچستان سید ظہور آغا نے ناراض صوبائی وزرا، مشیروں اور پارلیمانی سیکرٹروں کے استعفے منظور کرلئے ہیں،مستعفی ہونے والوں میں ظہور بلیدی، عبدالرحمان کھیتران اور اسد بلوچ شامل ہیں۔مشیروں میں اکبر آسکانی، محمد خان لہڑی کے استعفے منظور کردئیے گئے جکبہ گورنر بلوچستان نے 4 پارلیمانی سیکرٹیریز، لیلیٰ ترین ، بشریٰ رند، ماہ جیں اور لالہ رشید بلوچ کے بھی استعفے منظورکئے ہیں۔

کابل:افغانستان کے صوبہ قندوز میں نماز جمعہ کے دوران زور دار دھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں 50افراد جاں بحق اور90سے زائد زخمی ہوگئے۔افغان میڈیا کے مطابق صوبہ قندوز میں دھماکہ شہر کی جامع مسجد میں ہوا جہاں نماز جمعہ پڑھنے کیلئے آئے نمازیوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔ دھماکے کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو اہلکار موقع پر پہنچ گئے اور امدادی کارروائیوں کا آغاز کر دیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق دھماکے میں اب تک 50افراد جاں بحق اور 90سے زائد زخمی ہوگئے ہیں ، ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے جبکہ طالبان نے کنٹرول سنبھال لیا ہے۔

اسلام آباد: حکومت کی جانب سے بجلی ایک روپیہ 95 پیسے فی یونٹ مہنگی کردی گئی ہے جبکہ فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں ہونے والا اضافہ اکتوبر کے بلوں میں ادا کرنا ہوگا۔نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی(نیپرا)نے بجلی کی قیمت میں اضافے کی منظوری اگست کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی مد میں دی گئی ہے۔نیپرا کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق بجلی صارفین پر 30 ارب 40 کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا ،بجلی صارفین کو اضافی رقم اکتوبر کے بجلی بلوں میں ادا کرناہوگی جبکہ فیصلے کا اطلاق لائف لائن صارفین پر نہیں ہوگا اور کے الیکڑک صارفین پر نیپرا فیصلے کا اطلاق نہیں ہوگا۔

Share            News         Social       Media